Latest News

باگندر محلہ بجبہاڑہ میں شبانہ خونین معرکہ آرائی ، دو مقامی حزب جنگجو جاں بحق جھڑپ کے ساتھ کئی میں فورسز اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں ، ٹیر گیس شلنگ مکمل ہڑتال کے بیچ دونوں مقامی جنگجو آبائی علاقوں میں سپر د خاک ، تجہیز و تکفین میں ہزاروں کی شرکت ، انیٹر نیٹ معطل

WebDesk

باگندر محلہ بجبہاڑہ میں شبانہ خونین معرکہ آرائی ، دو مقامی حزب جنگجو جاں بحق

جھڑپ کے ساتھ کئی میں فورسز اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں ، ٹیر گیس شلنگ

مکمل ہڑتال کے بیچ دونوں مقامی جنگجو آبائی علاقوں میں سپر د خاک ، تجہیز و تکفین میں ہزاروں کی شرکت ، انیٹر نیٹ معطل

 

جنوبی قصبہ بجبہاڑہ کے باگندر محلہ میں فورسز اور جنگجوﺅں کے مابین شبانہ خونین معرکہ آرائی میں اعلیٰ تعلیم یافتہ نوجوان سمیت دو مقامی حزب جنگجو جاں بحق ہو گئے۔ دو مقامی جنگجوﺅں کے جاں بحق ہونے کی خبر پھیلتے ہی اننت ناگ اور بجبہاڑہ میں آنا فانا ہڑتال ہوئی جس دوران کئی مقامات پر احتجاجی مظاہرین اور فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئی۔ جھڑپ کے ساتھ ہی ضلع اننت ناگ اور کولگام میں موبائیل انٹر نیٹ خدمات معطل کی گئی ۔ ادھر مکمل ہڑتال اور بندشوں کے باوجود ایک کے بعد ایک نماز جنازوں کی ادائیگی کے بعد جاں بحق ہوئے دونوں مقامی جنگجوﺅں کو بارشوں کے بیچ اسلام وآزادی کے حق میں فلک شگاف نعروں اور مکمل ہڑتال کے بیچ اپنے آبائی علاقوں میں ہزاروں لوگوں کی موجودگی میں سپرد خاک کیا گیااور نماز جنازہ میں ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔سی این آئی کو دفاعی ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ جنوبی قصبہ بجبہاڑہ کے باگندر محلہ میں جنگجوﺅں کی موجودگی کی اطلاعات ملنے کے بعد فوج و فورسز ، سی آر پی ایف اور ایس او جی نے بدھ اور جمعرات کی درمیانی رات کو گھیرے میں لیا ۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ علاقے میںجمعرات کی صبح اس وقت گولیوں کی گن گرج سنائی دی جب وہاں موجود جنگجوﺅں نے فورسز محاصرہ توڑنے کی کوشش کی اور اندھا دھند فائرنگ کی جس کے ساتھ ہی فورسز اہلکاروں نے مورچہ زن ہوکر جوابی کارورائی کی ۔ گولیوں کی گن گرج سے پورا علاقہ لرز اٹھا جبکہ لوگ گھروں میں سہم کر رہ گئے ۔ ذرائع کے مطابق طرفین کے مابین گولیوں کا تبادلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا اور جونہی علاقے میں گولیوں کی گن گرج تھم گئی تو جھڑپ کے مقام سے دو جنگجوﺅں کی نعشیں برآمد ہوئی ۔ جاں بحق جنگجوﺅں میں25سالہ صفدر امین بٹ ولد محمد امین بٹ ساکنہ زرپورہ، بجبہارہ اور25سالہ برہان احمد گنائی عرف سیف اللہ ولد غلام محمد گنائی ساکنہ ہابلش ،کولگام، حال ایس کے کالونی اننت ناگ شامل ہیں۔ برہان جب2018میں عسکریت میں شامل ہوا تو وہ فزیو تھرپی میں ڈپلوما کررہا تھا۔پولیس کے مطابق دونوں کا تعلق حزب المجاہدین کے ساتھ تھا۔پولیس نے کہا کہ معرکہ آرائی کی جگہ سے ایک اے کے47رائفل اور ایک ایس ایل آر بندوق بر آمد کی گئی ہے۔ پولیس کے ایک سنیئر افسر نے جھڑپ کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ جنگجوﺅں کی موجودگی کی اطلاع ملنے کے بعد فورسز نے علاقے کو محاصرہ میں لیکر تلاشی کارروائی شروع کی ۔ انہوں نے بتایا کہ جونہی تلاشی شروع کی گئی تو وہاں موجود جنگجوﺅں نے حفاظتی دستوں پر فائرنگ کی جس کے جواب میں فورسز نے بھی جوابی کارروائی کی اور مختصر جھڑپ میں دو جنگجو ﺅں مارے گئے ۔ انہوں نے بتایا کہ دونوں جنگجوﺅں کے قبضے سے اسلحہ اور گولہ باورد ضبط کیا گیا جبکہ دونوں کا تعلق عسکری تنظیم حزب سے تھا ۔انہوں نے بتایا کہ پولیس نے ضروری لوازمات کی ادائیگی کے بعد جنگجو ﺅں کی نعشیں آخری رسومات کیلئے لواحقین کے حوالہ کر دی جبکہ اس سلسلے میں کیس درج کرکے تحقیقات شروع کر دی ۔ اسی دوران بجبہاڑہ میں جنگجوﺅں کے جاں بحق ہونے کی خبر پھیلتے ہی وادی کے کئی علاقوں میں آنا فانا ہڑتال ہوئی جس دوران تمام تجارتی و کارو باری سرگرمیوں معطل ہوئی جبکہ سڑکوں سے ٹریفک کی نقل و حمل بھی غائب رہی ۔ اسی دوران معلوم ہوا ہے کہ کئی مقامات پر احتجاجی مظاہرین اور فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئی۔ جھڑپ کے ساتھ ہی جنوبی ضلع اننت ناگ اور کولگام میں موبائیل انٹر نیٹ خدما ت معطل کی گئی ۔ادھرمکمل ہڑتال اور بندشوں کے باوجود ایک کے بعد ایک نماز جنازوں کی ادائیگی کے بعد بجبہاڑة جھڑپ میں جاں بحق ہوئے دو مقامی حز ب جنگجوﺅں کو اسلام وآزادی کے حق میں فلک شگاف نعروں اور مکمل ہڑتال کے بیچ اپنے آبائی علاقوں میں ہزاروں لوگوں کی موجودگی میں سپرد خاک کیا گیااور نماز جنازہ میں ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔ معلوم ہوا ہے کہ جمعرات کے بعد دو پہر جونہی دونوں مہلوک جنگجوﺅں کی نعشوں کو اپنے اپنے آبائی علاقوں میں پہنچایا گیا تو اس موقعے پر وہاں کہرام مچ گیااور لوگوں کا جم غفیر علاقے میں امڈ آیا اور اس دوران نہ صرف وہاں ماتم اور آہ و زاری کے رقعت آمیز مناظر دیکھے گئے بلکہ علاقے میں لاوڈ اسپیکروں پر اسلام اور آزادی کے حق میں نعرے بازی ہوئی ۔ بتایا جاتا ہے کہ اسی دوران مہلوک جنگجوﺅں کے آبائی علاقوں میں احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ شروع ہوا ۔ اسی دوران درجنوں دیہات سے سینکڑوں کی تعداد میں لوگوں نے دونوں جنگجوﺅں کے آبائی علاقوں کا رخ کیا جس دوران انہوں نے نماز جنازوں میں شمولیت اختیا رکی۔عین شاہدین کے مطابق لوگوں کی بھاری تعداد کے پیش نظر دونوں مہلوک جنگجوﺅں کا ایک درجن مرتبہ نما ز جنازہ ادا کیا گیا ،۔معلوم ہوا ہے کہ جاں بحق جنگجو ﺅںکے نماز جنازوں میں ہزاروں لوگوں کی تعداد میں شرکت کی جس کے بعد انہیں اپنے آبائی مقبروں میں پ ±ر نم آنکھوں کے ساتھ سپرد خاک کیا گیا ۔ اس دوران جاں بحق جنگجوﺅں کے یاد میں جنوبی ضلع اننت ناگ میں مکمل ہڑتال رہی جس کے نتیجے میں کاروباری سرگرمیاں معطل رہیں، دکانیں، تجارتی مراکزا ور دفاتر وغیرہ بند رہے جبکہ گاڑیوں کی آمدروفت بھی بری طرح سے متاثر رہے ۔ ۔ نمائندے کے مطابق مہلوک جنگجوﺅں کے تجہیز و تکفین کے بعد علاقے میں اس وقت حالات کشیدہ ہوگئے جب نوجواانوں کی ٹولیوں نے سڑکوں پر نکل کر احتجاجی مظاہرے کئے جس دوران مظاہرین اور فورسز کے درمیان جھڑپیں بھی ہوئی

CNI News Desk
the authorCNI News Desk
Current News of India (CNI) is the first news agency of Jammu & Kashmir. The agency's news reports have a massive reach as they are carried by national as well as local newspapers.

Leave a Reply