Health NewsInternational NewsUrdu News

کورونا وائرس کے بعد ایبولا وائرس کی وبا بھی پھوٹ پڑی

سی این آئی نیوز

عالمی ادارہ صحت نے خبردارکیا، لوگوں سے احتیاط برتنے کی اپیل

سرینگر/16فروری/سی این آئی// دنیا سے ابھی کورونا وبا کا خطرہ ٹلا نہیں ہے کہ عالمی ادارہ صحت نے ایک اور خطرناک وائرس ایبولا کی وبا پھوٹنے کا انکشاف کردیا ہے۔

سی این آئی مانیٹرنگ کے مطابق رپورٹ کے مطابق عالمی ادارہ صحت کی جانب سے خبردار کیا گیا ہے کہ کانگو اور گیانا میں ایبولا وائرس کے نئے کیسز سامنے آئے ہیں جس کے بعد اب وائرس کی روک تھام کے لیے اضافی احتیاطی تدابیر شروع کی جائیں۔بتایا گیا ہے کہ عالمی ادارہ صحت کی جانب سے ایبولا وائرس کی ویکسینیشن کی مہم کا بھی آغاز کردیا گیا ہے۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق عالمی ادارہ صحت کے ایک اعلیٰ عہدیدار نے بتایا ہے کہ کانگو اور گیانا میں ایبولا کے پھیلنے سے علاقائی سطح پر خطرہ لاحق ہے جس کے لئے غیر معمولی نگرانی کی ضرورت ہے۔بتایا گیا ہے کہ کانگو میں ایبولا وائرس کے چار واقعات کی تصدیق ہوئی تھی۔جس کے بعد 7 فروری کو بٹیمبو میں اس وائرس کے دوبارہ پھیلنے کا اعلان کیا گیا تھا۔ اس سے قبل کانگو میں پھیلنے والی وبا کا گزشتہ برس جون میں خاتمے کا اعلان کیا گیا تھا۔

عالمی ادارہ صحت نے نے پیر کے روز اپنے ایک ٹویٹ میں کہا کہ وائرس کے پھینلے کے خطرے کے باعث بٹیمبو میں ایبولا سے بچا ¶ کے قطرے پلانے کی ایک مہم شروع ہوگئی ہے۔ دوسری جانب مغربی افریقی ملک گیانا میں بھی گزشتہ روز ایبولا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے اور سات افراد میں وائرس پایا گیا ہے۔بتایا گیا ہے کہ ان سات میں سے 3 جان کی بازی ہار گئے۔ کیسز رپورٹ ہونے کے بعد عالمی ادارہ صحت کی جانب سے انتہائی سخت حفاظتی اقدامات کیے جا رہے ہیں۔ جبکہ وائرس کی ویکسینیشن کا بھی عمل تیز کردیا گیا ہے۔ خیال رہے کہ ایبولا وائرس شدید الٹی اور اسہال کا سبب بنتا ہے اور جسمانی رطوبتوں کے ساتھ رابطے کے ذریعہ پھیل جاتا ہے۔

CNI News Desk
the authorCNI News Desk
Current News Of India-CNI, is a first news agency and a multimedia news house that gather news and cover all the happenings of J&K and rest of the world. We Publish both English and Urdu news for newspapers and our news has a massive reach as they are carried by National as well as local Newspapers. CNI News is also one among the leading Multimedia News Houses.

Leave a Reply